اردوئے معلیٰ

Search

احسان مجھ پہ ہے مرے خیر الانام کا

اپنے کرم سے بھر دیا دامن غلام کا

 

آقا کی ذات پاک سے یوں رابطہ رہے

کرتی ہوں پیش تحفہ دروُدو سلام کا

 

اک روشنی سی ہو گئی خوشبو کے ساتھ ساتھ

چھیڑا ہے ذکر کس نے یہ بطحا کی شام کا

 

کتنی حسین ہو گئی ہے زندگی مری

ہے ورد میرے لب پہ محمد کے نام کا

 

مٹ جائے تشنگی مرے بھی قلب و روح کی

مل جائے ایک قطرہ جو کوثر کے جام کا

 

اے ناز آنحضور کی توصیف کے طفیل

مہکے گا حرف حرف بھی تیرے کلام کا

یہ نگارش اپنے دوست احباب سے شریک کیجیے
لُطفِ سُخن کچھ اس سے زیادہ