اردوئے معلیٰ

Search

اس کی طرف ہوا جو اشارہ علیؓ کا ہے

خیبر لرز رہا ہے کہ نعرہ علیؓ کا ہے

 

ایمان کی نظر سے ہی آئے گا یہ نظر

منظر فضائے دہر میں سارا علی کا ہے

 

جنّت کی آرزو ہے پھر آل نبی سے بُغض

جنّت کا یہ نظام تو سارا علیؓ کا ہے

 

نوکِ سناں پہ چڑھ کے جو کرتا رہا کلام

زھراؓ کا لال راج دلارا علیؓ کا ہے

 

میرے وطن کے دشمنوں باور رہے تمہیں

پرچم پہ اس کے چاند ستارا علیؓ کا ہے

 

مشکل خدا گواہ ہے مشکل نہیں رہی

مشکل میں جب بھی نام پکارا علیؓ کا ہے

 

اصحاب کی توقیر کا جس کو رہا خیال

بس جان لو وہ شخص ہی پیارا علیؓ کا ہے

 

مرحب سے جا کے پوچھئے بتلائے گا تمہیں

رسوا ہے جگ میں آج بھی مارا علیؓ کا ہے

 

گرداب میں جلیل تُو ڈرتا ہے کس لیے

دریا ہے موجزن تو کنارہ علیؓ کا ہے

یہ نگارش اپنے دوست احباب سے شریک کیجیے
لُطفِ سُخن کچھ اس سے زیادہ