اردوئے معلیٰ

Search

بے مثل مصطفیٰ سے الفت ہے مرتضیٰ کی

سرکارِ دو جہاں سے قربت ہے مرتضیٰ کی

 

حسنین کے ہیں بابا، شوہر بتُول کے ہیں

پھر کتنی خوبصورت نسبت ہے مر تضی کی

 

جس کے نبی ہیں مولا ، اس کے علی ہیں مولا

اصحاب میں جدا ہیں عظمت ہے مرتضیٰ کی

 

کھولی نہ آنکھ جب تک آئے نہ شاہِ عالم

روزِ ازل سے ایسی چاہت ہے مرتضیٰ کی

 

ہیں بحر علم و حکمت قرآن کے شناور

مشکل کشائی کرنا عادت ہے مرتضیٰ کی

 

جنگوں میں گونجتا ہے مولا علی کا نعرہ

دشمن پہ طاری ہر پل ہیبت ہے مرتضیٰ کی

 

مجھ کو ولائے حیدر ورثے میں مل گئی تھی

صد شکر ناز دل میں نکہت ہے مرتضیٰ کی

یہ نگارش اپنے دوست احباب سے شریک کیجیے
لُطفِ سُخن کچھ اس سے زیادہ