اردوئے معلیٰ

تاجدارِ اُمم! ہو کرم ہو کرم

تاجدارِ اُمم! ہو کرم ہو کرم

دُور ہوں رنج و غم ہو کرم ہو کرم

 

اور کچھ بھی نہیں مانگتا آپ سے

ہو کرم! ہو کرم! ہو کرم! ہو کرم!

 

صدقے سِبطَین کے اِذن دے دیجئے

آئیں چوکھٹ پہ ہم ہو کرم ہو کرم

 

آپ کے عشق میں کاش! روتا رہوں

ہو عطا چشمِ نم ہو کرم ہو کرم

 

ہے دعا سبز گنبد کے سائے تلے

بس نکل جائے دم ہو کرم ہو کرم

 

آصفِ پُر خطا کا شہِ دوسرا

آپ رکھیئے بھرم ہو کرم ہو کرم

یہ نگارش اپنے دوست احباب سے شریک کیجیے

اشتہارات

لُطفِ سُخن کچھ اس سے زیادہ