اردوئے معلیٰ

Search

تُو حاکم ھے تو اِن آفات پر رو کیا رھا ھے ؟

ھمیں بتلا ھمارے دیس میں ھو کیا رھا ھے ؟

 

ترے ھاتھوں پہ ھیں کم سِن لہُو کے سُرخ دھبّے

ارے ! یہ داغ مِٹنے کے نہیں، دھو کیا رھا ھے ؟

 

اور اب فصلِ اذیّت کاٹنے میں شور کیسا ؟

اگر بوتے ھوئے سوچا نہیں بو کیا رھا ھے

 

گُلابی عصمتوں کو نوچ کر بولے درندے

نُچے اُدھڑے بدن میں باقی دیکھو کیا رھا ھے

 

گلی کوچوں پہ چھائی ھے عزا کی رات، فارس

یہ ماتم کی گھڑی ھے، ھوش کر، سو کیا رھا ھے

یہ نگارش اپنے دوست احباب سے شریک کیجیے
لُطفِ سُخن کچھ اس سے زیادہ