جان ہی جائے تو جائے درد ددل

جان ہی جائے تو جائے درد دل

اک یہی ہے اب دوائے درد دل

بھاگتی ہے دور جس سے موت بھی

وہ بلا ہے یہ بلائے درد دل

 

یہ نگارش اپنے دوست احباب سے شریک کیجیے

اشتہارات

لُطفِ سُخن کچھ اس سے زیادہ