اردوئے معلیٰ

جوانی میں عدم کے واسطے سامان کر غافل

جوانی میں عدم کے واسطے سامان کر غافل

مسافر شب سے اٹھتے ہیں ، جو جانا دور ہوتا ہے

ہماری زندگانی حشرؔ مٹی کا کھلونا ہے

اجل کی ایک ٹھوکر سے جو چکنا چور ہوتا ہے

یہ نگارش اپنے دوست احباب سے شریک کیجیے

اشتہارات

لُطفِ سُخن کچھ اس سے زیادہ