اردوئے معلیٰ

Search

حرف کے طُرۂ دستار سے اوسع ، ارفع

نعت ہے فکرِ قلم کار سے اوسع ، ارفع

 

گو تمنا ہے ، مگر مدحِ شہِ دیں کا محافظ

ہے مرے حیطۂ اظہار سے اوسع ، ارفع

 

ہے کوئی جاں ترے آثارِ محبت سے ورا ؟

ہے کوئی دل ترے انوار سے اوسع ، ارفع ؟

 

بخدا وسعت و رفعت میں نہیں ہشت بہشت

کوچۂ احمدِ مختار سے اوسع ، ارفع

 

کس تمثیل میں بیاں ہو کوئی تمثیلِ کمال

خالقِ دہر کے شہکار سے اوسع ، ارفع

 

وہ عنایت ہے کہ ما بعدِ کفایت ہے عیاں

لطف ہے حاجتِ نادار سے اوسع ، ارفع

 

اُس کرم خُو سے ہُوں مقصودؔ طلب گارِ کرم

جس کا احسان ہے ہر بار سے اوسع ، ارفع

یہ نگارش اپنے دوست احباب سے شریک کیجیے
لُطفِ سُخن کچھ اس سے زیادہ