اردوئے معلیٰ

Search

خدا سے دُور کب تک رہ سکو گے

وبالِ ہجر کب تک سہہ سکو گے

وہ سُنتا ہے دُکھی دل کی صدائیں

ظفرؔ تم گِڑ گڑا کر کہہ سکو گے

 

یہ نگارش اپنے دوست احباب سے شریک کیجیے
لُطفِ سُخن کچھ اس سے زیادہ