اردو معلی copy
(ہمارا نصب العین ، ادب اثاثہ کا تحفظ)

خدا کا فیض جاری ہر جہاں میں

خدا کا فیض جاری ہر جہاں میں

فضاؤں میں، زمین و آسماں میں

ہر اک گلشن، چمن، ہر گلستاں میں

ظفرؔ ہر شش جہت، کون و مکاں میں

 

یہ نگارش اپنے دوست احباب سے شریک کیجیے
Share on facebook
Share on twitter
Share on whatsapp
Share on telegram
Share on email
لُطفِ سُخن کچھ اس سے زیادہ

اردوئے معلیٰ

پر

خوش آمدید!

گوشے

متعلقہ اشاعتیں

خدا کے حمد گو گلشن چمن ہیں
جو احکامِ خدا سے بے خبر ہے
خداوندِ جمیعِ مُرسلاں تُو
خدا کے نُور سے روشن زماں ہیں
خداوندِ جہاں آقا و مولا
خدا کا فیض جاری ہر زماں میں
رحمتِ الٰہی
پسماندگانِ عشق کی ڈھارس بندھائی جائے
ہر لمحہ زہرِ نو کوئی پی کر دکھائے تو
اے سی چلدے ، فوم دے گدے اتے پئن