اردوئے معلیٰ

خدا کی خاص رحمت اور کرم سے 

خدا کی خاص رحمت اور کرم سے

ہم اہلِ نعت مستثنٰی ہیں غم سے

 

وہ قاسم ہیں خدا کی نعمتوں کے

جو چاہو مانگ لو شاہِ امم سے

 

بھٹکتی پھر رہی تھی نسلِ آدم

ملی منزل ترے نقشِ قدم سے

 

غلامی کی سند ہم کو ملی ہے

جنابِ سیدِ عرب و عجم سے

 

محمد وجہِ تخلیقِ زمانہ

وجودستان قائم ان کے دم سے

 

سخی کی اک نظر نے ہر گدا کو

کیا آزاد فکرِ بیش و کم سے

یہ نگارش اپنے دوست احباب سے شریک کیجیے

اشتہارات

لُطفِ سُخن کچھ اس سے زیادہ