خدا کی عظمتیں ہر پل عیاں ہیں

خدا کی عظمتیں ہر پل عیاں ہیں

خُدا کی طاقتیں ہر پل عیاں ہیں

 

ہر اک اہلِ نظر، ہر دیدہ ور پہ

خُدا کی قدرتیں ہر پل عیاں ہیں

 

خُدا ہی خالقِ کون و مکاں ہے

خُدا کی رفعتیں ہر پل عیاں ہیں

 

خُدا روزی رساں سب عالمیں کا

خُدا کی نعمتیں ہر پل عیاں ہیں

 

خُدا دیتا ہے عزت، جاہ و حشمت

عطائیں، بخششیں ہر پل عیاں ہیں

 

خُدا کی اور محبوبِؐ خُدا کی

عطائیں، شفقتیں ہر پل عیاں ہیں

 

خُدا کی حمد ہر دم، نعت ہر پل

ظفرؔ کی چاہتیں ہر پل عیاں ہیں

یہ نگارش اپنے دوست احباب سے شریک کیجیے
Share on facebook
Share on twitter
Share on whatsapp
Share on telegram
Share on email
لُطفِ سُخن کچھ اس سے زیادہ

اردوئے معلیٰ

پر

خوش آمدید!

گوشے

متعلقہ اشاعتیں

پیش نگاہ خاص و عام، شام بھی تو، سحر بھی تو
تُوں دُنیا دے باغ دا
خدا ہے روشنی جھونکا خدا ہے
پُر لطف زندگی ہے مری لاجواب ہے
اسم اللہ، میری جاگیر
اذانوں میں صلوٰتوں میں، خدا پیشِ نظر ہر دم
خدا کی ذات پر ہر انس و جاں بھی ناز کرتا ہے
خدا موجود ہر سرِ نہاں میں
خداوندِ شفیق و مہرباں تو
خدا کا نام میرے جسم و جاں میں