اردوئے معلیٰ

دربار رسالت كی كیسی وہ گھڑی ہوگی

دربار رسالت كی كیسی وہ گھڑی ہوگی

حسانؓ كے ہونٹوں پر جب نعت نبی ہوگی

 

بُوبكرؓ و عمرؓ ہوں گے عثمانؓ و علیؓ ہوں گے

حسنینؓ كے نانا كی كیا بزم سجی ہو گی

 

كس شوق سے جاتے ہیں عُشاق مدینے كو

كیا حاضری قسمت میں اپنی بھی كبھی ہوگی

 

آئے گا بلاوا جب سركار كے روضے كا

دل سجدہ كُناں ہو گا آنكھوں میں جھڑی ہوگی

 

كام آئیں گے اے فیضیؔ انوار محبت كے

جب گوشہ مرقد میں اک تیرہ شبی ہوگی

 

یہ نگارش اپنے دوست احباب سے شریک کیجیے

اشتہارات

لُطفِ سُخن کچھ اس سے زیادہ