اردوئے معلیٰ

Search

درود پڑھتی ہیں عندلیبیں سلام بھیجیں یہ پھول سارے

ہیں رفعتِ ذکرِ مصطفیٰ میں یہ آیتوں کے نزول سارے

 

وہ ایک اُمی نقیبِ حکمت کتابِ روشن پڑھا رہا ہے

بتا رہا وہ ضابطے سب سکھا رہا ہے اصول سارے

 

حضور کی راہ گزر سے ہٹ کر یہ غیر کے جو بھی راستے ہیں

بس ان بیابان راستوں میں بچھے ہوئے ہیں ببُول سارے

 

ہم اُس امامِ اُمم کی امت جو پیشواؤں کا پیشوا ہے

ہمارے آقا کے مقتدی ہیں نبی، پیمبر، رسول سارے

 

بِنا طلب، حاجتیں روا ہوں، زباں پہ جاری درود ہو گر

جو پیروی یوں کریں گے ان کی، عمل ہیں شاہد قبول سارے

 

یہ نگارش اپنے دوست احباب سے شریک کیجیے
لُطفِ سُخن کچھ اس سے زیادہ