اردوئے معلیٰ

دل سے نکلے گی نہ مر کر بھی وطن کی اُلفت

 

دل سے نکلے گی نہ مر کر بھی وطن کی اُلفت

میری مٹی سے بھی خوشبوئے وفا آئے گی

یہ نگارش اپنے دوست احباب سے شریک کیجیے

اشتہارات

لُطفِ سُخن کچھ اس سے زیادہ