’دور ساحل موج حائل پار بیڑا کیجیے‘‘

 

’دور ساحل موج حائل پار بیڑا کیجیے‘‘

اک نگاہِ التفات اے میرے شاہا کیجیے

زور پر طوفان ہے کچھ آسرا ملتا نہیں

’’ناؤ ہے منجدھار میں اور ناخدا ملتا نہیں ‘‘

 

یہ نگارش اپنے دوست احباب سے شریک کیجیے

اشتہارات

لُطفِ سُخن کچھ اس سے زیادہ