اردوئے معلیٰ

Search

دو جہاں میں غیر ممکن ہے مثالِ مصطفیٰ

ٙمن راٰنی قد را لحق ہے جمالِ مصطفیٰ

 

کہتے ہیں ایمان جس کو ہے وہ قالِ مصطفیٰ

شک نہیں کچھ جس میں وہ قرآن حالِ مصطفیٰ

 

مرحبا کیا خوب ہے عِز و کمالِ مصطفیٰ

ہے جلالِ کبریا بے شک جلالِ مصطفیٰ

 

سر وہی سر ہے جو اُن کے قدموں پہ قربان ہو

دل وہی دل ہے کہ جس میں ہو خیالِ مصطفیٰ

 

بادشاہانِ جہاں بھی ہیں گدا بن کر کھڑے

بٹ رہا ہے آج بھی جُود و نوالِ مصطفیٰ

 

پھر تو ہو جائے ہمارا تاجداروں میں شمار

سر پہ رکھنے کو اگر پائیں نِعالِ مصطفیٰ

 

حضرتِ صدیق نے فاروق اعظم آپ نے

واہ وا کیا خوب پایا ہے وصالِ مصطفیٰ

 

منزلِ رُشد و ہدایت کے نجُوم اصحاب ہیں

ان کی رحمت سے ہے ناؤ خوب آلِ مصطفیٰ

 

فضل سے اپنے خدائے پاک نے محبوب کو

کر دیا مختارِ کُل کونین مالِ مصطفیٰ

 

مرزا چہرے پر ملے غازہ بنا کر یا نبی

ہو میسّر اس کو خاکِ پائمالِ مصطفیٰ

یہ نگارش اپنے دوست احباب سے شریک کیجیے
لُطفِ سُخن کچھ اس سے زیادہ