اردوئے معلیٰ

Search

روئے حضرت سے اگر نور نہ پایا ہوتا

دونوں عالم میں اندھیرا ہی اندھیرا ہوتا

 

یوسفِ مصر میں سب کچھ سہی لیکن اک بار

اے زلیخا مرے یوسف کو بھی دیکھا ہوتا

 

خیر سے امت عاصی کی شفاعت کر لی

ورنہ کیا جانیے کیا حشر ہمارا ہوتا

 

عرش پر خالقِ افلاک کے مہمان ہوئے

کیوں نہ دنیا سے بلند آپ کا پایا ہوتا

 

شاہِ لولاک کے دم سے ہے نمودِ ہستی

وہ اگر خلق نہ ہوتے تو یہاں کیا ہوتا

 

طور پر جا کے پریشان ہوئے مفت کلیم

اس سے یثرب میں چلے آتے تو اچھا ہوتا

 

مدح خوانِ شہہ لولاک بنایا حق نے

اور کیا اس سے زیادہ مرا رُتبہ ہوتا

 

ثانیٔ احمدِ مختار کا امکان نہیں

ایسا ہوتا تو ضرور آپ کا سایا ہوتا

 

افسرؔ اللہ نے بخشی تھی اگر طبعِ سلیم

عمر کو نعتِ محمد میں گزارا ہوتا

یہ نگارش اپنے دوست احباب سے شریک کیجیے
لُطفِ سُخن کچھ اس سے زیادہ