اردوئے معلیٰ

Search
جان عالم صلی اللہ علیہ آلہ وسلم کے لیے احادیث شمائل میں ” وَاسِعُ الجَبِین ” ” کے الفاظ ہیں۔(یعنی کشادہ پیشانی مبارک والے) بطور ردیف نظم کرنے کی سعادت :

 

روشن تِری جبین ہے اے واسِعُ الجَبِین !

مِرآتِ عالمین ہے اے واسِعُ الجَبِین !

 

جانِ بہار ! تیرا خزاں کُش وہ اِبتِسام

فارِح گَرِ حَزِین ہے اے واسِعُ الجَبِین !

 

اصلِ خلیل ! تیرے ہی قَطعِ بُتاں کا فیض

ابنِ سبکتگین ہے اے واسِعُ الجَبِین !

 

تُو نے بَقا بَنات کو دی ، تیری ہی عطا

تربیَّتِ بَنین ہے اے واسِعُ الجَبِین !

 

یہ بھی تِرا خصوص بَہ نَصِّ حدیث ہے

مُسلِم تِرا قرین ہے اے واسِعُ الجَبِین !

 

تجھ سے طلب خدا سے طلب ، اس کے کب خلاف

اِیّاکَ نَستَعِین "ہے اے واسِعُ الجَبِین !

 

تیری اَدائے حُسنِ مَواعِظ میں خوب درس

بہرِ مُبَلِّغین ہے اے واسِعُ الجَبِین

 

بچپن میں نعت خواں تھا ، تو مجھ کو کہا گیا

بچّہ بڑا ذہین ہے اے واسِعُ الجَبِین !

 

عاشق ترا ہمیشہ معظمؔ ہے اور عدو

دارین میں مَہین ہے اے واسِعُ الجَبِین !

یہ نگارش اپنے دوست احباب سے شریک کیجیے
لُطفِ سُخن کچھ اس سے زیادہ