اردوئے معلیٰ

 

(لمبی اداسی تان کے چپ سو گیا ہے وقت)

 

ٹھہری ہے ایک نقطے پہ گزرانِ روز و شب

خود اپنی گردشوں میں کہیں کھو گیا ہے وقت

 

گرتا ہے ریزہ ریزہ سا لمحوں کا ریگزار

شیشے کے ایک ظرف میں گم ہو گیا ہے وقت

 

اُلٹے گا ریگزار یہ دورانیے کے بعد

پھر سے پلٹ کر آئے گا اب جو گیا ہے وقت

 

یہ نگارش اپنے دوست احباب سے شریک کیجیے

اشتہارات

لُطفِ سُخن کچھ اس سے زیادہ

اردوئے معلیٰ

پر

خوش آمدید!

گوشے۔۔۔

حالیہ اشاعتیں

اشتہارات

اشتہارات