اردوئے معلیٰ

Search

زیست میں اپنی بہاراں کیجئے

’’ خوب مدحِ شاہِ خوباں کیجئے ‘‘

 

سب زباں پر لا کے ذکرِ مصطفیٰ

اپنی بخشش کا یوں ساماں کیجئے

 

مدحتوں میں ہو اجالے کا سماں

چاند تارے لا کے تاباں کیجئے

 

ہر جگہ میلاد میں ہوں قمقمے

گھر ، محلے کو درخشاں کیجئے

 

گنبدِ خضریٰ ،کہیں پر نقش پا

اپنی گلیوں میں نگاراں کیجئے

 

آمدِ میلاد پر عاشق سبھی

روبرو سب کے چراغاں کیجئے

 

چل کے سیرت پر مسلمانو! سدا

خود کو وقفِ میرِ میراں کیجئے

 

قافلے کب کے مدینے چل دیے

آقا مجھ کو بھی تو ذیشاں کیجئے

 

چھوڑ کر ذکرِ محمد کا جہاں

اپنی قسمت کو نہ ویراں کیجئے

 

دیں زیارت کی اجازت بھی حضور

پورے قائم کے بھی ارماں کیجئے

یہ نگارش اپنے دوست احباب سے شریک کیجیے
لُطفِ سُخن کچھ اس سے زیادہ