اردوئے معلیٰ

سردار کا ماتم گلی گلی

غدار کا ماتم گلی گلی

 

اے وطن فروشو کریں گے ہم

بیوپار کا ماتم گلی گلی

 

بندوقوں والے دیکھیں گے

تلوار کا ماتم گلی گلی

 

تم سب رکھوالے چوروں کے

کردار کا ماتم گلی گلی

 

ہوگا آئین کی میت پر

لاچار کا ماتم گلی گلی

 

تاریخ نے دیکھ لیا آخر

سالار کا ماتم گلی گلی

 

جھوٹی کٹھ پُتلی بے غیرت

سرکار کا ماتم گلی گلی

 

اے ہموطنوں تم دیکھو گے

غمخوار کا ماتم گلی گلی

 

ہے ٹھان لی دل نے ، اب ہوگا

بیمار کا ماتم گلی گلی

 

غربت کی دہشت گردی پر

بازار کا ماتم گلی گلی

 

روٹی کی لاش پہ برپا ہے

نادار کا ماتم گلی گلی

 

فرحت نے کرنا ہے تیرے

انکار کا ماتم گلی گلی

یہ نگارش اپنے دوست احباب سے شریک کیجیے

اشتہارات

لُطفِ سُخن کچھ اس سے زیادہ

اردوئے معلیٰ

پر

خوش آمدید!

گوشے۔۔۔

حالیہ اشاعتیں

اشتہارات

اشتہارات