اردوئے معلیٰ

Search

سڑکوں پہ لگنے والی عدالت کے ذمے دار

منصف ہیں شہر بھر کی ذلالت کے ذمے دار

 

تو چھوڑ ہر کسی کو چلا آ ہمارے پاس

ہم ہیں ناں درد ! تیری کفالت کے ذمے دار

 

اندر جو کشمکش تھی وہی مجھ کو کھا گئی

موسم نہیں ہیں میری علالت کے ذمے دار

 

آنکھوں سے لڑ رہے تھے کہ تعبیر بھی ملے

کچھ خواب خود تھے اپنی وکالت کے ذمے دار

 

نہ مانیے تو آپ کی مرضی ہے یہ جناب

سمجھیں تو آپ ہیں مری حالت کے ذمے دار

 

دلچسپی شائقین کی یونہی نہیں گھٹی

تھے قصہ گو سخن کی طوالت کے ذمے دار

یہ نگارش اپنے دوست احباب سے شریک کیجیے
لُطفِ سُخن کچھ اس سے زیادہ