اردوئے معلیٰ

Search

شوقِ خیالِ مدح نبی ہے جوازِ حرف

واللہ معتبر ہے مرا ارتکازِ حرف

 

مَیں لکھ رہا ہُوں نعتِ نبی درمیانِ دل

مَیں پڑھ رہا ہُوں کعبۂ جاں میں نمازِ حرف

 

آلودۂ نگارشِ غیرِ ثنا نہیں

کافی ہے میرے حرف کا یہ امتیازِ حرف

 

اُن کا نیاز دار ہی ہے ناز دارِ خیر

اُن کا ثنا گزار ہی ہے بے نیازِ حرف

 

ہے ترے نامِ پاک کی نسبت سے محتشم

واللہ اس سے بڑھ کے نہیں اعتزازِ حرف

 

بے حرف تیری نعت کی منزل پہ ہے سخن

سدرہ پہ پرفشاں ہے کوئی شاہ بازِ حرف

 

مدحت نصیب ہوئی مری نسلوں کے سلسلے

تسکین یاب ہے مرا جذبِ نیازِ حرف

 

احمد رضا سے پائی ہے خیراتِ شوقِ نعت

جامی کے در کا فیض ہے سوز و گدازِ حرف

 

صد شکر ، اُن کے اذنِ کرم بار کے طفیل

مقصودؔ بے ہنر نے بھی پایا فرازِ حرف

یہ نگارش اپنے دوست احباب سے شریک کیجیے
لُطفِ سُخن کچھ اس سے زیادہ