اردوئے معلیٰ

صحنِ گلشن میں لہو چھڑکا ہے دیوانوں نے

صحنِ گلشن میں لہو چھڑکا ہے دیوانوں نے

بُوئے خوں آتی ہے اس فصل میں گلزاروں سے

یہ نگارش اپنے دوست احباب سے شریک کیجیے

اشتہارات

لُطفِ سُخن کچھ اس سے زیادہ