اردوئے معلیٰ

فخر زماں ہو، فخر نبوت تم ہی تو ہو

دونوں جہاں ہیں جسکی بدولت تم ہی تو ہو

 

ہم عاصیوں کا تم ہی سہارا ہو یا نبی

ہم پر خدائے پاک کی رحمت تم ہی تو ہو

 

ہر اک نبی نے جس کی رسالت کا دَم بھرا

وہ بے مثال نازِ رسالت تم ہی تو ہو

 

معراج میں یہ راز مشیت عیاں ہوا

ہے عظمتوں سے بڑھ کے جو عظمت تم ہی تو ہو

 

پہچان تم نے دی ہمیں رب کریم کی

بتلایا جس نے طرزِ عبادت تم ہی تو ہو

 

ہمسر تمہارا کوئی نہیں دو جہان میں

ہر شے پہ جس نے پائی فضیلت تم ہی تو ہو

 

انساں کو جس نے درسِ مساوات ہے دیا

وہ موجد نظام مودت تم ہی تو ہو

 

قربان کیوں نہ جائیں محمد کے نام پر

ملتی ہے جس کے نام سے راحت تم ہی تو ہو

 

اطہر کو بخششوں کا یقیں ہو نہ کس لئے

محشر میں جو کریں گے شفاعت تم ہی تو ہو​

 

یہ نگارش اپنے دوست احباب سے شریک کیجیے

اشتہارات

لُطفِ سُخن کچھ اس سے زیادہ

اردوئے معلیٰ

پر

خوش آمدید!

گوشے۔۔۔

حالیہ اشاعتیں

اشتہارات

اشتہارات