اردوئے معلیٰ

Search

لوگ مصروفِ خدائی ہیں خدا کے گھر میں

بندہ توبہ کرے مسجد سے اب آ کے گھر میں

 

پُل بنانے میں تھے مصروف، یہ معلوم نہ تھا

دریا آ جائے گا دیواریں گرا کے گھر میں

 

اتنا گھبرائے گھٹن سے کہ ہم ایسے محتاط

آ گئے لے کے دیا اپنا ہوا کے گھر میں

 

کھوٹا سکہ تو نہیں ہے یہ محبت لوگو

آزماؤ اِسے، رکھو نہ چھپا کے گھر میں

 

میں نکلتا ہوں غم دنیا پہن کر ہر صبح

نوچ دیتا ہوں اسے شام کو جا کے گھر میں

 

آپ کے در سے کہیں اُٹھ کے نہ جاؤں مولا

کیجئے مجھ سے سلوک ایسا بُلا کے گھر میں

 

یہ نگارش اپنے دوست احباب سے شریک کیجیے
لُطفِ سُخن کچھ اس سے زیادہ