اردوئے معلیٰ

ملا محبوب ہے رب العلی کا

عجب انداز ہے فضل خدا کا

 

محبت بانٹنا ہے کام اس کا

جو بھی ہے نام لیوا مصطفٰی کا

 

زمانہ مجھ سے کرتا ہے محبت

کہ ہوں مدحت سرا خیرالوری کا

 

بنے گرویدہ سب عرب و عجم کے

یہ بھی اک معجزہ ہے دوسرا کا

 

یہ جاں ناموس پر قربان کر دوں

نصیبا اوج پر ہو پھر وفا کا

 

رواداری بھی سکھلائی نبی نے

اخوت بھی سبق ہے اس شہہ کا

 

خلیل اک خواب اقدس کی ہے خواہش

کہ چہرہ دیکھ لوں میں دل ربا کا

یہ نگارش اپنے دوست احباب سے شریک کیجیے

اشتہارات

لُطفِ سُخن کچھ اس سے زیادہ

اردوئے معلیٰ

پر

خوش آمدید!

گوشے۔۔۔

حالیہ اشاعتیں

اشتہارات

اشتہارات