اردوئے معلیٰ

میری زباں پہ محمد کا نام آ جائے

میری زباں پہ محمد کا نام آ جائے

یہی وظیفہ سرِ حشر کام آ جائے

 

خدایا صبحِ مدینہ مجھے بھی دکھلا دے

کہ پہلے دید سے میری نہ شام آ جائے

 

میری دعا ہے کہ فضلِ خدا سے دنیا میں

میرے حضور کا کامِل نظام آ جائے

 

یہی غلامیِ سرکار کا تقاضا ہے

جہاں حضور پکاریں غلام آ جائے

 

میں سمجھوں اوج پہ اپنا نصیب اے آصف

جو شہرِ طیبہ سے مجھ کو پیام آ جائے

یہ نگارش اپنے دوست احباب سے شریک کیجیے

اشتہارات

لُطفِ سُخن کچھ اس سے زیادہ