نظر فروز ہے منظر بہار ہے ساقی

نظر فروز ہے منظر بہار ہے ساقی

کہ تیرا جلوہ رخِ لالہ زار ہے ساقی

سرور و کیف بھی ایسا ہی کچھ عطا کر دے

کہ جیسے تشنہ لبی کی پکار ہے ساقی

یہ نگارش اپنے دوست احباب سے شریک کیجیے

اشتہارات

لُطفِ سُخن کچھ اس سے زیادہ