اردوئے معلیٰ

نعتِ نبی مدینے میں جا کر سنائیں گے

سوزِ جگر حضور کو رو رو دکھائیں گے

 

ہنستے ہوئے مدینے کو جائیں گے ایک دن

لوٹے تو اشک غم سے بہا کر پھر آئیں گے

 

اس در کے ہیں گدا سو رہیں گے تمام عمر

پایا ہے سب حضور سے ، ان کا ہی کھائیں گے

 

نیندوں میں گنگنائیں گے نعتیں رسول کی

پڑھتے ہوئے درود واں خوابوں میں جائیں گے

 

لگ جائے ہم پہ مہر غلامی کی تو عطا

کوثر بھی دستِ پاک سے محشر میں پائیں گے

یہ نگارش اپنے دوست احباب سے شریک کیجیے

اشتہارات

لُطفِ سُخن کچھ اس سے زیادہ

اردوئے معلیٰ

پر

خوش آمدید!

گوشے۔۔۔

حالیہ اشاعتیں

اشتہارات

اشتہارات