اردوئے معلیٰ

نُطق بے ربط ہے اور طبعِ رواں ہے کژمژ

درگہِ نعت میں سب زورِ بیاں ہے کژمژ

 

آپ آئیں گے تو ہو جائے گا تزئیں ساماں

سیدی ! یہ جو مرا خیمۂ جاں ہے کژمژ

 

نعت ہی راست تیقن کی ہے ضامن ، ورنہ

مَیں گماں زاد ہُوں اور میرا گماں ہے کژمژ

 

معتبر آپ کی نسبت سے ہی ہونگے واللہ

ورنہ یہ شوق عبث ، قلبِ تپاں ہے کژمژ

 

نعت ہی سے اسے ملنی ہے شرَف بیز اماں

حرفِ محجوب کراں تا بہ کراں ہے کژمژ

 

کوئی تدبیر مدینے کے سفر کی مقصودؔ

ورنہ ہر منظرِ احساس بہ جاں ہے کژمژ

یہ نگارش اپنے دوست احباب سے شریک کیجیے

اشتہارات

لُطفِ سُخن کچھ اس سے زیادہ

اردوئے معلیٰ

پر

خوش آمدید!

گوشے۔۔۔

حالیہ اشاعتیں

اشتہارات

اشتہارات