اردوئے معلیٰ

نہ مال و زر نہ کلاہ و قبا سے مطلب تھا

انہیں ہمیشہ خدا کی رضا سے مطلب تھا

 

کسی بھی شخص سے مطلوب کچھ نہ تھا ان کو

فقط کرم سے غرض تھی ، عطا سے مطلب تھا

 

کچھ اور چاہتے کب تھے خدا کے بندوں سے

خدا کی راہ میں ان کی وفا سے مطلب تھا

 

حضورِ پاک انہیں لائے راستی کی طرف

کہ جن کو ظلم سے، کذب و ریا سے مطلب تھا

 

وہ برگزیدہ پیمبر وہ منتخب بندے

انہیں کہاں کسی حرص و ہوا سے مطلب تھا

 

کیا معاف سبھی کو فقط خدا کے لئے

انہیں سزا کی بجائے ہُدیٰ سے مطلب تھا

 

نہ جانے کیسے مباحث میں پڑ گئے انور

ہمیں تو اُسوۂ خیرالوریٰ سے مطلب تھا

 

یہ نگارش اپنے دوست احباب سے شریک کیجیے

اشتہارات

لُطفِ سُخن کچھ اس سے زیادہ

اردوئے معلیٰ

پر

خوش آمدید!

گوشے۔۔۔

حالیہ اشاعتیں

اشتہارات

اشتہارات