وہ یکتا منفرد سب سے جدا ہے، خدائے مصطفیٰؐ میرا خدا ہے

وہ یکتا منفرد سب سے جدا ہے، خدائے مصطفیٰؐ میرا خدا ہے

وہی سب ناخداؤں کا خدا ہے، خدائے مصطفیٰ میرا خدا ہے

 

خدا گرتے ہووں کو تھامتا ہے، خدا بے آسروں کا آسرا ہے

خدا حاجت روا مشکل کشا ہے، خدائے مصطفیٰ میرا خدا ہے

 

وہی جو رحمۃ اللعالمیںؐ ہیں، وہی جو کہ شفیع المذنبیں ہیں

خدا نے خود اُنھیں احمدؐ کہا ہے، خدائے مصطفیٰ میرا خدا ہے

 

خدا نے عرش پر اُنؐ کو بلایا، شفاعت کا اُنھیں مژدہ سنایا

خدا نے اُنؐ کو یہ رُتبہ دیا ہے، خدائے مصطفیٰ میرا خدا ہے

 

اُنھیںؐ رہبر زمانوں کا بنایا، اُنھیںؐ قاسم خزانوں کا بنایا

خدا دیتا، محمد بانٹتا ہے، خدائے مصطفیٰ میرا خدا ہے

 

وہی لا ریب محبوبِ خدا ہیں، وہی بیشک حبیبِ کبریاؐ ہیں

درود اُنؐ پر خدا بھیجے سدا ہے، خدائے مصطفیٰ میرا خدا ہے

 

مرا معمول بس حمد و ثنا ہے، مرا معمول نعتِ مصطفیٰ ہے

ظفرؔ صدیق کے دل کی صدا ہے، خدائے مصطفیٰ میرا خدا ہے

یہ نگارش اپنے دوست احباب سے شریک کیجیے
Share on facebook
Share on twitter
Share on whatsapp
Share on telegram
Share on email
لُطفِ سُخن کچھ اس سے زیادہ

اردوئے معلیٰ

پر

خوش آمدید!

گوشے

متعلقہ اشاعتیں

جو حقِ ثنائے خدائے جہاں ہے
سننے والا ہے جو دعاؤں کا
جلوہ ہے یا نُور ہے ،یا نُور کا پردہ تیرا
خُداوندِ کون و مکاں، اللہ اللہ
بے شکلوں کو چہرے دینے والی ذات
مری مشکل خدایا کر دے آساں
خدا ارفع، عظیم و محتشم ہے
خدا سارے زمانوں کا ہے خالق
کرم فرمائی رب کی بیشتر ہے
خدا سے وصل ہو دل چاہتا ہے