اردوئے معلیٰ

Search

پڑھتے ہیں جو درود شہِ ذی وقار پر

ملتا ہے فیض ان کو ہمیشہ پکار پر

 

ہم ہی نہیں ہیں کرتے ثنائے حبیبِ پاک

ہے حکم رب درود پڑھو تاج دار پر

 

جیون گزارا جن نے غلامی میں آپ کی

جلتے سدا چراغ ہیں ان کے مزار پر

 

تڑپت ہے پیش کرنے کو اک بار پھر سلام

کیجے کرم حضور دلِ بیقرار پر

 

توصیف کیا بیان کرے اس کی وارثیؔ

کل کائنات ناز کرے یارِ غار پر

یہ نگارش اپنے دوست احباب سے شریک کیجیے
لُطفِ سُخن کچھ اس سے زیادہ