اردوئے معلیٰ

Search

چراغِ عقیدت کو دل میں جلا کر

ہمیشہ زباں سے نبی کی ثنا کر

 

مجھے ہجرِ طیبہ سے مولا رہا کر

حضوری مدینے کی مجھ کو عطا کر

 

اگر چاہیے ہے عنایت خدا کی

جیو دل میں عشقِ محمد بسا کر

 

مقدر حلیمہ کا اس وقت چمکا

چلیں گود میں جب نبی کو اٹھا کر

 

تمنا زیارت کی ہے دل میں آقا

کرم کیجیے خواب میں میرے آ کر

 

قیامت میں آقا کی پائے شفاعت

جو رکھے شریعت کو دل سے لگا کر

 

جسے کامرانی ہو مطلوب زاہدؔ

جیے عشقِ احمد کو دل میں بسا کر

 

یہ نگارش اپنے دوست احباب سے شریک کیجیے
لُطفِ سُخن کچھ اس سے زیادہ