اردوئے معلیٰ

Search

 

چلے آئے زمیں پر عرش سے جب مصطفیٰ میرے

دلوں میں زندگی کے رنگ نکھرے کیا خدا میرے

 

مری ماں نے کہا بیٹے پڑھو، صلیِ علیٰ جب تو

تصور نے نبی کی شان دیکھی دلربا میرے

 

گئے تھے عرش پہ ملنے کو خالق سے وہ لمحوں میں

جہانوں میں کہاں کوئی نبی کی شان کا میرے

 

محمد مصطفیٰ صدقے تیرے بس ہے دعا میری

مرے ایمان کا دل میں رہے روشن دیا میرے

 

تصور میں جو گل دیکھوں کبھی میں گنبد خضریٰ

گلے لگتی ہے ایسے میں مدینے کی ہوا میرے

 

یہ نگارش اپنے دوست احباب سے شریک کیجیے
لُطفِ سُخن کچھ اس سے زیادہ