اردوئے معلیٰ

چند لمحوں کا ہے زوال مرا

اُس کو آتا نہیں خیال مرا

 

آپ کا بھی کوئی جواب نہیں

آپ سنتے نہیں سوال مرا

 

رنگ بھرتا ہوں میں چراغوں میں

تو نے دیکھا نہیں جمال مرا

 

حوصلہ ہے ترے فقیروں کا

دیکھ مجھ کو نہیں ملال مرا

 

زینؔ ہنس کر گلے لگاؤں اُسے

لوٹ آئے جو خوش خیال مرا

یہ نگارش اپنے دوست احباب سے شریک کیجیے

اشتہارات

لُطفِ سُخن کچھ اس سے زیادہ

اردوئے معلیٰ

پر

خوش آمدید!

گوشے۔۔۔

حالیہ اشاعتیں

اشتہارات

اشتہارات