اردوئے معلیٰ

Search

کاش میں بھی زندگی میں صبحِ بہجت دیکھ لوں!

قریۂ ہستی میں آقا کی حکومت دیکھ لوں

 

خاکِ نقشِ پائے سرور ہو اگرمجھ کو نصیب!

میں اسے سرمہ بناؤں اور جنت دیکھ لوں

 

نورِ نقشِ پائے آقا ہی نگاہوں میں رہے

محفلوں میں رہ کے بھی میں رنگِ خلوت دیکھ لوں

 

میرا خامہ سرورِ کونین کی نعتیں لکھے

زیست کے لمحات میں تاثیرِ مدحت دیکھ لوں

 

یوں ملے پیکر رسولِ ہاشمی کے عشق کو

مدح کی صورت میں، میں تجسیمِ نکہت دیکھ لوں

 

داد پاؤں روزِ محشر سرورِ کونین سے

خُلد میں حَسَّانِؓ طیبہ کی رفاقت دیکھ لوں

 

دیکھ لوں میں بھی مناظر پیرویِ شاہ کے

ہر مسلماں کے عمل میں رنگِ سنت دیکھ لوں

 

سعیِ آقا سے جو چھایا تھا فضاؤں میں کبھی

اُمتِ آقا میں وہ رنگِ اُخوَّت دیکھ لوں

 

میں عزیزؔ احسن بہت رکھتا ہوں یوں تو خواہشیں

کاش میں خود کو ہی پابندِ شریعت دیکھ لوں

یہ نگارش اپنے دوست احباب سے شریک کیجیے
لُطفِ سُخن کچھ اس سے زیادہ