کرم محاسن وسیع تیرے

کرم محاسن وسیع تیرے

مقام رتبے رفیع تیرے

 

نبی رسولوںؑ کا مقتدا تو

نبی ہیں پیچھے جمیع تیرے

 

خدا کی مرضی تو بس یہی ہے

بنے رہیں ہم مطیع تیرے

 

ہے تیری نسبت سے میری قیمت

غلام سب ہیں وقیع تیرے

 

پلک جھپکنے میں عرش پر تھے

قدم تھے اتنے سریع تیرے

 

عذابِ رسوائی سے بچانا

غلام ہیں یا شفیع تیرے

یہ نگارش اپنے دوست احباب سے شریک کیجیے

اشتہارات

لُطفِ سُخن کچھ اس سے زیادہ