کرم کا مرحلہ پیشِ نظر ہے

کرم کا مرحلہ پیشِ نظر ہے

جلال کِبریا پیشِ نظر ہے

ظفرؔ پر ہر نوازش ہے خدا کی

خدا کی ہر عطا پیشِ نظر ہے

 

یہ نگارش اپنے دوست احباب سے شریک کیجیے
Share on facebook
Share on twitter
Share on whatsapp
Share on telegram
Share on email
لُطفِ سُخن کچھ اس سے زیادہ

اردوئے معلیٰ

پر

خوش آمدید!

گوشے

متعلقہ اشاعتیں

پیش نگاہ خاص و عام، شام بھی تو، سحر بھی تو
تُوں دُنیا دے باغ دا
خدا ہے روشنی جھونکا خدا ہے
پُر لطف زندگی ہے مری لاجواب ہے
جو مشفق ہے جو مونس مہرباں ہے، وہی تیرا خدا میرا خدا ہے
مقام و مرتبہ اللہ کا اللہ اکبر
جہاں کے بُتکدوں سے دُور رہنا
خدا نے نعمتیں بخشی ہیں کیا کیا، خدا نے برکتیں بخشی ہیں کیا کیا
خدا کی حمد میں رطب اللساں ہیں
خدا توفیق دے مجھ کو میں حمد و ثناء لکھوں