اردوئے معلیٰ

Search

کس کے دل کی ہیں دُعا حضرتِ سچل سرمست

ہر کوئی کہتا ہے یا حضرتِ سچل سرمست

 

مستیاں میرے مقدر کا ستارا بن جائیں

مسکرائیں جو ذرا حضرتِ سچل سرمست

 

ہر سر شوق تو اس در کا سزاوار نہیں

میں کجا اور کجا حضرتِ سچل سرمست

 

آپ کے فیض سے سرکار کے در تک پہنچا

جس طرف سے بھی چلا حضرتِ سچل سرمست

 

کچھ مجھے پئے حسنین کریمین ملے

آپ ہیں شانِ خدا حضرتِ سچل مسرمست

 

جھوٹ مٹتا نہیں اس ملک سے کیوں رب کریم

صدق کی جب ہیں بنا حضرتِ سچل سرمست

 

کام بن جائے گا صرف ایک نظر میں واللہ

ہے صبیحؔ! آپ ہی کا حضرتِ سچل سرمست

یہ نگارش اپنے دوست احباب سے شریک کیجیے
لُطفِ سُخن کچھ اس سے زیادہ