کلر بلائنڈ Colour Blind

پہچان نہیں ہے
رنگوں کی مجھ کو
میں اِس نعمت سے عاری ہوں
کیونکہ میں نے اب تک
اُس کے چہرے کی
قوسِ قزح کے رنگوں سے آگے
کوئی رنگ نہیں دیکھا
یہ نگارش اپنے دوست احباب سے شریک کیجیے
Share on facebook
Share on twitter
Share on whatsapp
Share on telegram
Share on email

اشتہارات

لُطفِ سُخن کچھ اس سے زیادہ

اردوئے معلیٰ

پر

خوش آمدید!

گوشے

متعلقہ اشاعتیں

تمہار ے لئے ایک نظم
اِک بار اُٹھے تھے جو قدم نورِ ہدیٰ کے
انا پرست تو ہم ہیں ، غرور کس کا ہے
مِری نظر تھا اندھیروں میں ڈھل گیا مجھ سے
صاحبِ اختیار خالق ہے
سیرتِ پاک پر بات کا سلسلہ
جو عبث ہم پہ رہا شک اُس کا
سوچ سفر
یاد
اِک عقیدت کے ساتھ کہتا ہوں

اشتہارات