اردوئے معلیٰ

کوئی بھیک رُوپ سرُوپ کی

کوئی بھیک رُوپ سرُوپ کی ، کوئی صدقہ حسن و جمال کا

شب و روز پھرتا ہوں در بدر میں فقیر شہر ِ وصال کا

یہ نگارش اپنے دوست احباب سے شریک کیجیے

اشتہارات

لُطفِ سُخن کچھ اس سے زیادہ