اردوئے معلیٰ

کٹ کر بھی تجھ سے روح کی چاہت نہ کم ہوئی

کٹ کر بھی تجھ سے روح کی چاہت نہ کم ہوئی

گر کر بھی پر شکستوں کی ہمت نہ کم ہوئی

یہ نگارش اپنے دوست احباب سے شریک کیجیے

اشتہارات

لُطفِ سُخن کچھ اس سے زیادہ