اردوئے معلیٰ

Search

گرچہ مہنگا ھے مذھب، خُدا مُفت ھے

اک خریدو گے تو دُوسرا مُفت ھے

 

کیوں اُلجھتے ھو ساقی سے قیمت پہ تُم ؟

دام تو جام کے ھیں، نشہ مُفت ھے

 

آئنوں کی دُکاں میں لکھا تھا کہیں

آپ اندھے ھیں تو آئنہ مُفت ھے

 

اُس نے پُوچھا کہ پازیب کتنے کی ھے؟

سارا بازار چِلّا اُٹھا: مُفت ھے

 

آخری سانس کے بعد عُقدہ کُھلا

مَیں سمجھتا رھا تھا ھوا مُفت ھے

 

فیصلہ کیجیے، بھاؤ تاؤ نہیں

یا محبت ھے انمول یا مُفت ھے

 

دُوسرا جان دے کے بھی مِلتا نہیں

عشق کی ڈور کا اک سِرا مُفت ھے

یہ نگارش اپنے دوست احباب سے شریک کیجیے
لُطفِ سُخن کچھ اس سے زیادہ