اردوئے معلیٰ

ہر لمحہ زہرِ نو کوئی پی کر دکھائے تو

مر مر کے شہرِ ہجر میں جی کر دکھائے تو

اپنے ہی ہاتھوں اپنا کلیجہ کیا ہے چاک

چارہ گری کرے، کوئی سی کر دکھائے تو

یہ نگارش اپنے دوست احباب سے شریک کیجیے

اشتہارات

لُطفِ سُخن کچھ اس سے زیادہ

اردوئے معلیٰ

پر

خوش آمدید!

گوشے۔۔۔

حالیہ اشاعتیں

اشتہارات

اشتہارات