اردوئے معلیٰ

ہر کہ می داند شمارِ داغہائے خویش را

نیست روزِ حشر صائب در شمارِ عاشقاں

 

ہر وہ کہ جو اپنے (دل اور سینے پر لگے)

داغوں کی تعداد اور گنتی جانتا ہے،اے صائب

(یقین جان کہ) روزِ حشر وہ عاشقوں

کی گنتی میں نہیں آئے گا

یہ نگارش اپنے دوست احباب سے شریک کیجیے

اشتہارات

لُطفِ سُخن کچھ اس سے زیادہ

اردوئے معلیٰ

پر

خوش آمدید!

گوشے۔۔۔

حالیہ اشاعتیں

اشتہارات

اشتہارات