اردوئے معلیٰ

Search

ہماری عقل و خرد سے اونچا مقام اُن کا

ہے سدرۃ المنتہیٰ سے آگے خرام اُن کا

 

وہ سب سے افضل وہ سب سے اعلیٰ وہ سب سے اولیٰ

تبھی تو دیکھو لقب ہے خیر الانام اُن کا

 

کوئی بھی حسنِ دگر نظر کو مری نہ بھائے

بسا ہے میری نظر میں بس حسنِ تام اُن کا

 

لواے نعتِ محمدی پر ہے درج ذکرک

بہ حکمِ ربی ہے ذکر جاری مدام اُن کا

 

بغیر چومے ادا نہ ہو گا وہ نام لب سے

تمام ناموں میں سب سے پیاراہے نام اُن کا

 

سلامِ ابروے شہ میں گھٹ کر بصد عقیدت

اُتارے صدقہ وجودِ ماہِ تمام اُن کا

 

شجر، حجر، بحر و بر یہ سارے ہیں اُن کے دم سے

ہر ایک جانب رواں دواں ہے نظام اُن کا

 

ندامتوں کو وہی تو ڈھانپیں گے روزِ محشر

شفیعِ محشر ہیں ان کو زیبا ہے کام اُن کا

 

براے بخشش سند یہ کافی ہے تجھ کو منظر

کہ تو ہے ابنِ غلام ابنِ غلام اُن کا

یہ نگارش اپنے دوست احباب سے شریک کیجیے
لُطفِ سُخن کچھ اس سے زیادہ