اردوئے معلیٰ

Search

ہم کو اپنی طلب سے سوا چایئے

آپ جیسے ہیں ویسی عطا چایئے

 

کیوں کہیں یہ عطا وہ عطا چایئے

آپ کو علم ہے ہم کو کیا چایئے

 

اک قدم بھی نہ ہم چل سکیں گے حضور

ہر قدم پہ کرم آپ کا چایئے

 

آستانِ حبیب خدا چایئے

اور کیا ہم کو اس کے سوا چایئے

 

آپ اپنی غلامی کی دے دیں سند

بس یہی عزت و مرتبہ چایئے

یہ نگارش اپنے دوست احباب سے شریک کیجیے
لُطفِ سُخن کچھ اس سے زیادہ